Sunan Ibn Majah - Chapters On Medicine 33 - Hadith #3540

Chapter Chapters On Medicine
Book Sunan Ibn Majah Sunan Ibn Majah
Hadith No 3540
Baab الطب (طب) ‌كے ‌احكام ‌و مسائل
عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہما کہتے ہیں کہ   رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: چھوت چھات، بدشگونی اور الو دیکھنے کی کوئی حقیقت نہیں، ایک شخص آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی جانب اٹھ کر بولا: اللہ کے رسول! ایک اونٹ کو جب کھجلی ہوتی ہے تو دوسرے اونٹ کو بھی اس کی وجہ سے کھجلی ہو جاتی ہے ۱؎، آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: یہی تو تقدیر ہے، آخر پہلے اونٹ کو کس نے کھجلی والا بنایا ۲؎۔
Ibn ‘Umar said:
“The Messenger of Allah (ﷺ) said: ‘There is no ‘Adwa, no omen, and no Hamah.’ A man stood up and said: ‘O Messenger of Allah, what if a camel has mange and another camel gets mange from it?’ He said: ‘That is the Divine decree. Who causes the mange in the first one?’”
حَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ،‏‏‏‏ حَدَّثَنَا وَكِيعٌ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِي جَنَابٍ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِيهِ،‏‏‏‏ عَنْ ابْنِ عُمَرَ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ لَا عَدْوَى،‏‏‏‏ وَلَا طِيَرَةَ،‏‏‏‏ وَلَا هَامَةَ ،‏‏‏‏ فَقَامَ إِلَيْهِ رَجُلٌ، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ،‏‏‏‏ الْبَعِيرُ يَكُونُ بِهِ الْجَرَبُ،‏‏‏‏ فَتَجْرَبُ بِهِ الْإِبِلُ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ ذَلِكَ الْقَدَرُ فَمَنْ أَجْرَبَ الْأَوَّلَ .
Reference : Sunan Ibn Majah 3540
In-book reference : Book 33, Hadith 105
USC-MSA web (English) reference
(deprecated numbering scheme)
: Vol. 5, Position 52 of Hadith 3540.
Sunan Ibn Majah
Hadith# 3540
حَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ،‏‏‏‏ حَدَّثَنَا وَكِيعٌ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِي جَنَابٍ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِيهِ،‏‏‏‏ عَنْ ابْنِ عُمَرَ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ لَا عَدْوَى،‏‏‏‏ وَلَا طِيَرَةَ،‏‏‏‏ وَلَا هَامَةَ ،‏‏‏‏ فَقَامَ إِلَيْهِ رَجُلٌ، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ،‏‏‏‏ الْبَعِيرُ يَكُونُ بِهِ الْجَرَبُ،‏‏‏‏ فَتَجْرَبُ بِهِ الْإِبِلُ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ ذَلِكَ الْقَدَرُ فَمَنْ أَجْرَبَ الْأَوَّلَ .
عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہما کہتے ہیں کہ   رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: چھوت چھات، بدشگونی اور الو دیکھنے کی کوئی حقیقت نہیں، ایک شخص آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی جانب اٹھ کر بولا: اللہ کے رسول! ایک اونٹ کو جب کھجلی ہوتی ہے تو دوسرے اونٹ کو بھی اس کی وجہ سے کھجلی ہو جاتی ہے ۱؎، آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: یہی تو تقدیر ہے، آخر پہلے اونٹ کو کس نے کھجلی والا بنایا ۲؎۔
Ibn ‘Umar said: “The Messenger of Allah (ﷺ) said: ‘There is no ‘Adwa, no omen, and no Hamah.’ A man stood up and said: ‘O Messenger of Allah, what if a camel has mange and another camel gets mange from it?’ He said: ‘That is the Divine decree. Who causes the mange in the first one?’”
Sunan Ibn Majah
Hadith# 3540
حَدَّثَنَا أَبُو بَكْرِ بْنُ أَبِي شَيْبَةَ،‏‏‏‏ حَدَّثَنَا وَكِيعٌ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِي جَنَابٍ،‏‏‏‏ عَنْ أَبِيهِ،‏‏‏‏ عَنْ ابْنِ عُمَرَ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ:‏‏‏‏ لَا عَدْوَى،‏‏‏‏ وَلَا طِيَرَةَ،‏‏‏‏ وَلَا هَامَةَ ،‏‏‏‏ فَقَامَ إِلَيْهِ رَجُلٌ، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ يَا رَسُولَ اللَّهِ،‏‏‏‏ الْبَعِيرُ يَكُونُ بِهِ الْجَرَبُ،‏‏‏‏ فَتَجْرَبُ بِهِ الْإِبِلُ،‏‏‏‏ قَالَ:‏‏‏‏ ذَلِكَ الْقَدَرُ فَمَنْ أَجْرَبَ الْأَوَّلَ .
عبداللہ بن عمر رضی اللہ عنہما کہتے ہیں کہ   رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: چھوت چھات، بدشگونی اور الو دیکھنے کی کوئی حقیقت نہیں، ایک شخص آپ صلی اللہ علیہ وسلم کی جانب اٹھ کر بولا: اللہ کے رسول! ایک اونٹ کو جب کھجلی ہوتی ہے تو دوسرے اونٹ کو بھی اس کی وجہ سے کھجلی ہو جاتی ہے ۱؎، آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: یہی تو تقدیر ہے، آخر پہلے اونٹ کو کس نے کھجلی والا بنایا ۲؎۔
Ibn ‘Umar said: “The Messenger of Allah (ﷺ) said: ‘There is no ‘Adwa, no omen, and no Hamah.’ A man stood up and said: ‘O Messenger of Allah, what if a camel has mange and another camel gets mange from it?’ He said: ‘That is the Divine decree. Who causes the mange in the first one?’”

More Hadiths From: Sunan Ibn Majah - Chapter 33